45

مقابلہ حسن جیتنے کی خواہش

معروف پاکستانی ماڈل دیا علی”مس ایکو” مقابلے میں ملک کی نمائندگی کرنے مصر کے شہر اسکندریہ پہنچ گئی ہیں جہاں دنیا کے مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والی سینکڑوں ماڈلز موجود ہیں-دیا علی نے اس موقع پر ہونے والی پریس کانفرنس میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ تاثر بالکل غلط ہے کہ پاکستان ایک قدامت پسند ملک ہے جہاں اس طرح کی سرگرمیوں کی اجازت نہیں ہے .انہوں نے مزید کہا کہ اقوام متحدہ کو ماحول کی حفاظت کے لئے اقدامات کرنے چاہیئں کیونکہ ماحولیاتی آلودگی میں خطرناک حد تک اضافہ ہورہا ہے جو سب کے لئے بہت نقصان دہ ہے .اس کے علاوہ پاکستان سمیت مختلف ممالک میں پانی کی کمی پر قابو پانے کے لئے بھی اقدامات ضروری ہیں-پاکستان روانگی سے قبل دیا علی نے”کھوج” سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس سے قبل میں مس ایشیاء پیسیفک اور مس پاکستان کے ٹائٹل جیت چکی ہوں جبکہ اب میں” مس ایکو” کا ٹائٹل بھی جیتنے کی خواہش مند ہوں-ایک سوال کے جواب میں دیا علی کا کہنا تھا کہ مجھے پر اکثر فحاشی کا الزام لگایا جاتا ہے جو بالکل غلط ہے کیونکہ میں وہی لباس پہنتی ہوں جو اس طرح کے بین الاقوامی مقابلوں کی ضرورت ہوتے ہیں-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں